یہ ہوتی ہے قیادت!چین نے ملک بھر سے غربت کا خاتمہ کردیا، اگلے 100سال کا ہدف بھی پیش کر دیا – 6

یہ ہوتی ہے قیادت!چین نے ملک بھر سے غربت کا خاتمہ کردیا، اگلے 100سال کا ہدف بھی پیش کر دیا –

بیجنگ (نیوز ڈیسک ) انسداد غربت، چین کے تجربات اور خدمات کے عنوان سے وائٹ پیپر کا اجرا کردیا گیا، جس میں کہا گیا کہ چین نے کامیابی کے ساتھ غربت میں خاتمے کا ہدف حاصل کرلیا ہے، اگلا صد سالہ ہدف جدید سوشلسٹ ملک کی تعمیر ہوگا، غربت کیخلاف جنگ میں چینی دیہاتوں میں تاریخی تبدیلی آئی، دیہی علاقوں میں 770 ملین سے زائد عوام کو غربت سے

نجات دلوائی گئی۔میڈیارپورٹس کے مطابق چین کی ریاستی کونسل کے پریس دفتر نے چھ تاریخ کو ’’انسداد غربت : چین کے تجربات اور خدمات‘‘ کے عنوان سے وائٹ پیپر جاری کیا ہے۔ جس میں سو برسوں میں غربت کے خاتمے کے لیے چین کے عظیم عمل کا جائزہ لیا گیا۔ وائٹ پیپر میں کہا گیا ہے کہ دو ہزار بیس کے اوآخر تک چین میں انسداد غربت کا ہدف حاصل کیا گیا۔ وائٹ پیپر میں نشاندہی کی گئی ہے کہ انسداد غربت کی جنگ سے چین کے دیہات میں جامع اور تاریخی تبدیلی آئی ہے۔یہ ایک عظیم انقلاب ہے۔ جس کی مدد سے جدید سوشلسٹ ملک کی تعمیر اور دوسرے صد سالہ ہدف کی تکمیل کے لئے ایک مضبوط بنیاد فراہم کی گئی ہے۔ انسداد غربت کے میدان میں جامع کامیابی نے چینی قوم کے ہزاروں سال پرانے خواب اور خواہش کو پورا کیا ہے۔ وائٹ پیپر میں نشاندہی کی گئی ہے کہ عالمی آبادی کے پانچویں حصے والے چین میں مطلق غربت کا خاتمہ اور شیڈول سے دس سال پہلے اقوام متحدہ کے دو ہزار تیس پائیدار ترقیاتی ایجنڈے کی تکمیل ، نہ صرف چینی ترقی میں سنگ میل ہے ،بلکہ عالمی ترقی کی تاریخ کا بھی ایک بڑا واقعہ ہے جو انسداد غربت اور انسانی ترقی کی راہ میں ایک بڑی خدمت ہے۔وائٹ پیپر میں نشاندہی کی گئی ہے کہ چین میں اصلاحات اور کھلے پن کی پالیسی متعارف کروائے جانے کے بعد سے غربت کی موجودہ تعریف کے مطابق 770 ملین سے زائد غریب دیہی عوام کو غربت سے نجات دلوائی گئی ہے۔ عالمی بینک کے بین الاقوامی غربت کے معیار کے مطابق چین کی جانب سے غربت کے خلاف حاصل کی گئی کامیابی ،عالمی سطح پر اس شعبے میں حاصل کی گئی کامیابی کا 70 فیصد سے زائد ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں